خوش آمدیددعازبورویڈیوز

زبور 7 – عدل و انصاف کے لئے دُعا

زبور 7: ” اے خُداوند میرے خُدا! میرا توکل تجھ پر ہے۔ سب پیچھا کرنے والوں سے مجھے بچا اور چھُڑا۔ ایسا نہ ہو کہ وہ شیرببر کی طرح میری جان کو پھاڑے۔ وہ اُسے ٹکڑے ٹکڑے کردے اور کوئی چھُڑانے والا نہ ہو۔ اے خُداوند میرے خُدا! اگر مَیں نے یہ کِیا ہو۔ اگر میرے ہاتھوں سے بدی ہوئی ہو۔ اگر مَیں نے اپنے میل رکھنے والے سے بھلائی کے بدلے بُرائی کی ہو۔ ( بلکہ میں نے تو اُسے جو ناحق میرا مُخالف تھا بچایا ہے ) تو دُشمن میری جان کا پیچھا کر کے اُسے آ پکڑے بلکہ وہ میری زندگی کو پامال کر کے مٹی میں اور میری عزت کو خاک میں مِلا دے۔

اے خُداوند! اپنے قہر میں اُٹھ۔ میرے مخالفوں کے غضب کے مقابلہ میں تُو کھڑا ہو جا اور میرے لئے جاگ۔ تُو نے اِنصاف کا حکم تو دیدیا ہے۔ تیرے چوگرد قوموں کا اجتماع ہو اور تُو اُنکے اُوپر عالِم بالا کو لَوٹ جا۔ خُداوند قوموں کا اِنصاف کرتا ہے۔ اے خُداوند! اُس صداقت و راستی کے مطابق جو مجھ میں ہے میری عدالت کر۔ کاش کہ شریروں کی بدی کا خاتمہ ہو جائے پر صادق کو تُو قیام بخش کیونکہ خُداوند صادق دِلوں اور گُردوں کو جانچتا ہے۔ میری سپِر خُدا کے ہاتھ میں ہے جو راست دِلوں کو بچاتا ہے۔ خُدا صادق مُنصف ہے بلکہ ایسا خُدا جو ہر روز قہر کرتا ہے۔

اگر آدمی باز نہ آئے تو وہ اپنی تلوار تیز کریگا۔ اُس نے اپنی کمان پر چِلّہ چڑھا کر اُسے تیار کر لِیا ہے۔ اُس نے اُس کے لئے موت کے ہتھیار بھی تیار کِئے ہیں۔ وہ اپنے تِیروں کی آتشی بناتا ہے۔ دیکھو اُسے بدی کا دردِ زہ لگا ہے! بلکہ وہ شرارت سے باروار ہوا ور اُس سے جھوٹ پیدا ہوا۔ اُس نے گڑھا کھود کر اُسے گہرا کِیا اور اُس خندق میں جو اُس نے بنائی تھی خُود گِرا۔ اُس کی شرارت اُلٹی اُسی کے سر پر آئیگی۔ اُس کا ظلم اُسی کی کھوپڑی پر نازل ہوگا۔ خُداوند کی صداقت کے مطابق میں اُس کا شکر کرونگا اور خُداوند تعالیٰ کے نام کی تعریف گاؤنگا”۔ آمین!


ShareShare on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+Email this to someone
Previous post

زبور 6 - مصیبت میں مدد کے لئے فریاد

Next post

زبور 8 - خدا کی تمجید اور انسان کا وقار

No Comment

Leave a reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Time limit is exhausted. Please reload CAPTCHA.