بلاگخوش آمدید

بائبل شادی سے پہلے جنسی تعلق کے بارے میں کیا کہتی ہے؟

پاک کلام میں یہ لکھا ہے کہ 1 کُرنتھیوں 7 باب 2 آیت: ” لیکن حرامکاری کے اندیشہ سے ہر مرد اپنی بیوی اور ہر عورت اپنا شوہر رکھّے”۔

اِس آیت میں پال کہتے ہیں کہ شادی جنسیت کا علاج ہے۔ اِس آیت میں کہا گیا ہے کیونکہ لوگ اپنے آپ کو نہیں سمبھال پاتے اور بہت سے لوگ شادی کے بغیر جنسی تعلق رکھتے ہیں، لیکن لوگوں کو نکاح کی شکل میں پاک ہونا چاہیے۔ پھر وہ اپنی خواہیشات کو ایک اچھے طریقے سے پورا کر سکتے ہیں۔

اِس آیت میں جنسیت کو صاف طور پر غیر اخلاقی چیز کہا گیا ہے، بائبل میں ہر جگہ جنسیت کے غیر اخلاقی عمل کو گناہ کہا گیا ہے۔ بائبل میں جنسیت کو غیر اخلاقی عمل کہتے ہوئے گناہ قرار دیا ہے۔ خدا صرف شوہر اور بیوی کے درمیان جنسیت کو قبول کرتا ہے۔

نکاح کے درمیان جنسیت ایک خوشی دیتی ہے اور خدا نے یہ ایک اچھا طریقہ بنایا ہے تاکہ ہم گناہ سے بچ سکیں۔ خدا چاہتا ہے کہ شوہر اور بیوی نکاح کی صورت میں جنسیت کا عمل کریں۔ البتہ جوڑوں کو خدا کی مرضی کو سمجھنا چاہیے جس میں بچہ پیدا کرنا بھی شامل ہے۔

اگر جنسیت کے بارے میں بائبل کی تعلیمات پر عمل کیا جائے تو اِس طرح جنسیت کی بیماریاں بھی کم ہو جائیں گی، بچہ بھی ضایع نہیں کرنا پڑھے گا اور عورتیں غیر اخلاقی طریقے سے حاملہ نہیں ہونگیں اور بچے یتیمی میں والدین کے بغیر بھی نہیں رہیں گے۔ خدا کی راہ پر چلتے ہوئے غیر اخلاقی عمل سے بچیں۔ اِس کے ذریعے بہت سی جانیں اور بچے محفوظ رہیں گے اور ہمارے رشتے میں بھی ایک سچائی ہو گی۔ خدا کے لئے ہمارا رشتہ ایک عزت کا مقام ہو گا۔


ShareShare on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+Email this to someone
Previous post

مسیحیت اور مسیح کا مزاق اُڑایا جانا

Next post

مسیحی بننے کا عمل

No Comment

Leave a reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Time limit is exhausted. Please reload CAPTCHA.