خوش آمدیددعا

مصیبت کے وقت کی دُعا

یوناہ 2 باب: ” تب یوناہ نے مچھلی کے پیٹ میں خداوند اپنے خدا سے یہ دعا کی “۔

میں نے اپنی مصیبت میں خداوند سے دعا کی اور اس نے میری سنی. میں نے پاتال کی تہہ سے دہائی دی، تو نے میری فریاد سنی. تو نے مجھے گہرے سمندر کی تہہ میں پھینک دیا اور سیلاب نے مجھے گھیر لیا. تیری سب موجیں اور لہریں مجھ پر سے گزر گئیں اور میں سمجھا کہ تیرے حضور سے دور ہو گیا ہوں لیکن میں پھر تیری مقدّس ہیکل کو دیکھوں گا. سیلاب نے میری جان کا محاصرہ کیا. سمندر میری چاروں طرف تھا. بحری نبات میرے سر پر لپٹ گئی. میں پہاڑوں کی تہہ تک غرق ہو گیا. زمین کے اڑبنگے ہمیشہ کے لئے مجھ پر بند ہو گئے. تو بھی اے خداوند میرے خدا تو نے میری جان پاتال سے بچائی. جب میرا دل بیتاب ہوا تو میں نے خدا کو یاد کیا اور میری دعا تیری مقدس ہیکل میں تیرے حضور پہنچی. جو لوگ جھوٹے معبودوں کو مانتے ہیں وہ شفقت سے محروم ہو جاتے ہیں. میں حمد کرتا ہوا تیرے حضور قربانی گزرانوں گا. میں اپنی نظریں ادا کروں گا. نجات خداوند کی طرف سے ہے۔

اور خداوند نے مچھلی کو حکم دیا اور اس نے یوناہ کو خشکی پر اگل دیا. آمین!


ShareShare on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+Email this to someone
Previous post

ایک پاکستانی مسلمان کا اسلام سے مسیحیت تک کا سفر

Next post

آج کا پیغام - خداوند میں مسرور رہ

No Comment

Leave a reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Time limit is exhausted. Please reload CAPTCHA.