خوش آمدیدمسیحیوں پر ظلم و ستمویڈیوز

پاکستان میں مسیحی قوم – حقوق، عزت اور وقار کے لئے جنگ

جناب شہباز گلزار، ایک پاکستانی مسیحی انسانی حقوق کارکن اس ویڈیو کے ذریعے ہمارے ساتھ اپنے تجربے کو اشتراک کر رہے ہیں کہ کس طرح پاکستان میں مسیحی قوم ناانصافی اور ظلم کا شکار ہو رہی ہے. خاص طور پر توہین رسالت کے قانون کی وجہ سے جو جنرل ضیاء الحق نے لاگو کیا تھا. پاکستان کے مسلمان بہت آسانی سے اس قانون کا غلط استعمال کر کے مسیحی قوم کو پریشان کر سکتے ہیں اور حقیقت میں ایسا کرتے بھی ہیں. ذاتی مفادات، حسد، پیسے کے معاملات، یا جائیداد کے مسائل کی وجہ سے مسلمان اکثر مسیحیوں پر توہین رسالت کا الزام لگا کر ان کی زندگی تباہ کر دیتے ہیں۔

توہین رسالت کا کیا مطلب ہے؟ اس کا مطلب ہے قرآن یا پیغمبر محمد کے خلاف توہین آمیز الفاظ کا استعمال کرنا. حقائق کی تصدیق کئے بغیر مسلمان پر تشدد ہو کر ملزم کے خاندان کو مارنا شروع کر دیتے ہیں، وہ مسیحی کالونیوں کو جلانا اور تباہ کرنا شروع کر دیتے ہیں. ایک مسیحی کے خلاف توہین رسالت کا جھوٹا الزام اس پورے علاقے کے مسیحیوں کے لئے جہنم ثابت ہوتا ہے. اس طرح کے معاملات میں گرجاگھر بھی ڈر کی وجہ سے مدد نہیں کرتے ہیں اور نہ ہی اپنی قوم کے دفاع میں آگے آتے ہیں، اور نہ ہی پولیس اور حکومت مسیحی برادری کے تحفظ کے لئے کاروائی کرتی ہیں۔


ShareShare on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+Email this to someone
Previous post

تھائی لینڈ میں ایک پاکستانی مسیحی ماں کی حالت زار - طبی امداد کی فوری ضرورت

Next post

آج کا پیغام - انسانوں سے نہیں صرف اپنے خدا سے ڈرو

No Comment

Leave a reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Time limit is exhausted. Please reload CAPTCHA.